دماغ کی تیزی کا وظیفہ

آج ہم آپکو ایک ایسا وظیفہ بتانے جارہے ہیں جس سے آپکا دماغ کمپیوٹر سے بھی تیز چلنے لگے گا۔بہت سارے ایسے بچے ہوتے ہیں جن کو بھولنے کی عادت ہوتی ہے کچھ بھی یا د نہیں رہتا۔ان کے والدین یا وہ خود ہی مٹھائی پر یا کھانے پر یہ دم کرکے کھائیں انشاءللہ دماغ بہت تیز ہوجائے گا۔ایک مرتبہ سید نا علیؓ مسجد میں تشریف فرما تھے

ایک ساعل آیا اور عرض کرنے لگااے امیر المومنین میں باتوں کو بھول جاتا ہوں۔میرا دماغ تیز نہیں یہاں تک کے قرآن پاک بھی یاد کرنے میں بھی دقت ہوتی ہے۔کوئی ایسا عمل یا وظیفہ بتائیں کہ جس سے میرا دماغ تیز ہومیری یا داشت تیز ہو۔تو حضرت علیؓ نے اس سے کہا کہ تم جو بھی رزقِ حلال کھاﺅ اس پر ایک مرتبہ یا علیمُ یا اللہ کے ورد کا دم کرکے اس پہ کھاﺅ اللہ کے کرم سے تمہارا دماغ تیز ہوجائےگا۔اور

فجر کی نماز کے بعد آسمان کی طرف دیکھ کے یا علیمُ یا اللہ کا ورد کرکے دعا کرو انشائاللہ تم باتوں کو کبھی بھی نہیں بھولو گے۔اور اس کے بعد اس ساعل نے ایسا ہی کیا اور اس کے بعد جب حضرت علیؓ کی خدمت میں حاضر ہوا اور کہنے لگا کہ اے حضرت علیؓ آپ نے جو وظیفہ بتایا تھا اس کی مدد سے الحمداللہ میرا دماغ کافی تیز ہوچکا ہے اور مجھے بھولنے کی بیماری بالکل ختم ہوچکی ہے۔

اب ہم آپکو وہ وظیفہ بتاتے ہیں۔اگر آپ نے اپنے لئے یا اپنے بچوں کے لئے کرنا ہے تو آپ دس دن کا ٹائم پیریڈ رکھیں تو آپ نے دن کے کسی بھی وقت یاعلیمُ یااللہ کو 33مرتبہ پڑھ کے اس کے اول و آخر میں جھ جھ دفعہ درود شریف پڑھ کے کسی بھی مٹھائی پہ دم کرنا ہے ۔اگر آپ نے ایک ہی دن میں کرنا ہے تو آپ دس دنوں کے حساب سے 330مرتبہ پڑھنا ہے

اول وآخر چھ چھ مرتبہ درود شریف پڑھ کے کسی بھی مٹھائی یا بادام کسی بھی چیز پر دم کرنا ہے اور رات کو سوتے ہوئے اور صبح اٹھتے ہوئے ایک ایک اپنے بچے کو کھلا دیں۔دس دن تک آپ اپنے بچے کو دیں انشاءاللہ اس کا دماغ کمپیوٹر سے بھی زیادہ تیزہوجائے گا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *